Home  
    Mayor  
    Deputy Mayor  
    Metropolitan Commissioner  
    Departments  
    KMC Directory  
    Photo Gallery  
    Video Gallery  
       
 
 
       
    Tender Information  
    KMC Function  
    Tenders  
    Grand Auctions  
    Section 144 CR.P.C  
    Notifications  
    KMC Resolution  
       
 
 
       
    Public Notice  
    Information  
    National Holidays  
    Prayer Timings  
    Archive  
       


 
 
 
 
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے گولیمار میں رہائشی عمارت کے گرنے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ چھوٹے چھوٹے پلاٹوں پر بلند و بالا عمارتوں کی تعمیر اور پلازے بنانے کا خمیازہ آخرکار شہریوں کو بھگتنا پڑرہا ہے-  
     
  05-Mar-2020  
     
   
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے گولیمار میں رہائشی عمارت کے گرنے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ چھوٹے چھوٹے پلاٹوں پر بلند و بالا عمارتوں کی تعمیر اور پلازے بنانے کا خمیازہ آخرکار شہریوں کو بھگتنا پڑرہا ہے،لاتعداد رہائشی عمارتوں کو یہ سوچے بغیر کمرشلائز کردیا گیا ہے کہ شہر پر ان کے کیا اثرات مرتب ہوں گے ، چھوٹے اور کم ترقی یافتہ علاقوں میں عمارتوں کی تعمیر میں قواعد وضوابط کو بری طرح نظر انداز کیا جاتا ہے اور ناقص مٹیریل استعمال کیا جاتا ہے جس کے باعث آئے دن یہ حادثات رونما ہوتے ہیں انہوں نے کہا کہ سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی نے جس طرح بلند و بالا عمارتوں کی تعمیر کے اجازت نامے جاری کئے ہیں اس سے یہ شہر کنکریٹ کا جنگل بنتا جا رہاہے انہوں نے کہا کہ اگر اس معاملے کو سنجیدگی سے نہ روکا گیا اور غیرقانونی اجازت نامے منسوخ نہ کئے گئے تو شہریوں کو شدید نقصان کا خدشہ ہے، میئر کراچی وسیم اختر نے حادثے میں جاں بحق ہونے والے 10 افراد کے لواحقین سے اظہار تعزیت کرتے ہوئے دعا کی ہے کہ اللہ تعالیٰ انہیں جنت الفردوس میں جگہ عطا فرمائے جبکہ زخمی ہونے والے افراد جنہیں عباسی شہید اسپتال منتقل کیا گیا ان کے لئے انہوں نے سینئر ڈائریکٹر میڈیکل سروسز کو ہدایت کی کہ وہ ان کے علاج معالجے میں کوئی کسر اٹھا نہ رکھیں اور بہتر سے بہتر علاج کی سہولتیں فراہم کریں، میئر کراچی نے ریسکیو ٹیم ، فائربریگیڈ اور سٹی وارڈنز کے افسران و عملے کی کوششوں کو سراہتے ہوئے کہا کہ جان و مال کی حفاظت میں ہمارے ان محکموں کا کردار انتہائی اہم ہے اور اپنی استعداد کے مطابق گولیمار کے اس واقعہ میں بھی افسران و ملازمین نے اپنی کارکردگی کو ثابت کیا ہے جبکہ عباسی شہید اسپتال میں پہنچنے والے زخمیوں کو بروقت طبی امداد دی گئی ہے، انہوں نے کہا کہ عباسی شہید اسپتال آنے والے اکثر زخمیوں کو ابتدائی طبی امداد کے بعد گھر بھیج دیا گیا ہے تاہم جو افراد زیادہ زخمی ہوئے تھے انہیں اسپتال میں داخل کرکے علاج معالجے کی سہولتیں فراہم کی جا رہی ہیں، انہوں نے کہا کہ سٹی وارڈنز نے جس طرح وہاں ہجوم کو سنبھالا اور ریسکیو کے کاموں میں مدد کی وہ قابل تحسین ہے، سینئر ڈائریکٹر میڈیکل سروسز نے بتایا کہ عباسی شہید اسپتال میں شام تک حادثے میں مرنے والے 10 افراد کی لاشیں اور 35 زخمی لائے گئے تھے،انہوں نے بتایا کہ میئر کراچی نے ہدایت کی ہے کہ وہ لواحقین کے ساتھ تعاون کریں اور زخمیوں کو بہتر سے بہتر سہولت مہیا کریں اور جن زخمیوں کو آپریشن کی ضرورت ہو ان کا آپریشن فوری کیا جائے تاکہ وہ جلد صحت یاب ہوسکیں، عباسی شہید اسپتال میں جاں بحق ہونے والے، علاج معالجے کے بعد اسپتال سے ڈسچارج کئے جانے والے اور اسپتال میں داخل مریضوں کی فہرست اسپتال میں آویزاں کردی گئی ہے تاہم لواحقین کو کسی قسم کی پریشانی کا سامنا نہ کرنا پڑے۔  
     
     
   
     
     

 

 

 

 

 
 
     
 

Copyright © 2011-2012 Karachi Metropolitan Corporation. All rights reserved.
The KMC will not be responsible for the content of external internet sites. / Login  / Webmail  / Webmail 2  / 1339 Executive Dashboard