Home  
    Mayor  
    Deputy Mayor  
    Metropolitan Commissioner  
    Departments  
    KMC Directory  
    Photo Gallery  
    Video Gallery  
       
 
 
       
    Tender Information  
    KMC Function  
    Tenders  
    Grand Auctions  
    Section 144 CR.P.C  
    Notifications  
    KMC Resolution  
       
 
 
       
    Public Notice  
    Information  
    National Holidays  
    Prayer Timings  
    Archive  
       


 
 
 
 
     
  ڈپٹی میئر کراچی ڈاکٹر ارشد عبداللہ وہرہ نے کہا ہے کہ ایبٹ آباد کی کونسل کے پاس جتنے وسائل اور اختیارات ہیں اگر اتنے ہی اختیارات ہمیں بھی مل جائیں تو کراچی میں شہریوں کے بنیادی مسائل حل کیے جا سکتے ہیں۔  
     
  17-Mar-2017  
     
   
     
  ڈپٹی میئر کراچی ڈاکٹر ارشد عبداللہ وہرہ نے کہا ہے کہ ایبٹ آباد کی کونسل کے پاس جتنے وسائل اور اختیارات ہیں اگر اتنے ہی اختیارات ہمیں بھی مل جائیں تو کراچی میں شہریوں کے بنیادی مسائل حل کیے جا سکتے ہیں۔ ناکافی وسائل کے باوجود ہم نے کراچی میں بہتری کے لیے کام شروع کیے ہیں اور شہر کی صورتحال میں بتدریج بہتری آنے لگی ہے۔ قومی خزانے میں 68فیصد ریونیو دینے والے شہر کراچی کے ساتھ ہونے والی مالیاتی نا انصافی بڑا ظلم ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بلدیہ عظمیٰ کراچی کے دورے پر آئے ہوئے ایبٹ آباد کے میئر اور 28رکنی وفد سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر سٹی کونسل میں پارلیمانی لیڈر اسلم آفریدی اور سینئر ڈائریکٹر میونسپل سروسز مسعود عالم بھی موجود تھے۔ ڈپٹی میئر کراچی نے کہا کہ کراچی میں ایک بہت بڑی آبادی کا تعلق ایبٹ آباد اور پاکستان کے دیگر حصوں میں رہنے ولی آبادی سے ہے جن کے مسائل کو ہم دیگر علاقوں کے مسائل کی طرح مساوی بنیادوں پر حل کرنے کی پوری کوشش کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ایبٹ آباد کا تعلق ہزارہ سے ہے اور میں نے بحیثیت ڈپٹی میئر حلف اٹھانے کے بعد پہلا دورہ ہی اس علاقے کا کیا جہاں ہزارہ سے تعلق رکھنے والے افراد رہائش پذیر ہیں۔ملاقات کے دوران سینئر ڈائریکٹر میونسپل سروسز مسعود عالم نے ایبٹ آباد کونسل کے ارکان کو کراچی شہر کی مختصر تاریخ ‘ درپیش مسائل اور چیلنجز کے حوالے سے بذریعہ پریزنٹیشن تفصیلات سے آگاہ کیا۔انہوں نے بتایا کہ کراچی شہر کا صرف 31فیصد کنٹرول بلدیہ عظمیٰ کراچی کے پاس ہے جبکہ یہاں کل 17مختلف ایجنسیز کے پاس لینڈ کنٹرول موجود ہے جس کی وجہ سے شہری مسائل کے حل میں مشکلات اور پیچیدگیوں کا سامنا ہے۔انہوں نے بتایا کہ فنڈز کے حصول کے لیے کراچی شہر کو وفاقی اور صوبائی حکومت کی گرانٹس پر انحصار کرنا پڑتا ہے جبکہ بلدیہ عظمیٰ کراچی کی اپنی آمدنی کے ذرائع SLGA 2013کے ذریعے انتہائی محدود کر دیے گئے۔انہوں نے کہا کہ اگر آکٹرائے شیئر کے واجبات کا حساب لگایا جائے تو سندھ حکومت کے ایم سی کی 35ارب روپے کی مقروض ہے۔ کراچی میں یونٹی آف کمانڈ ختم ہوگئی ہے اور مسائل بکھرتے جا رہے ہیں۔ ڈپٹی میئر کراچی نے کہا کہ یہ شہر جتنا ہمارا ہے اتنا ہی آپ کا بھی ہے خواہ آپ پاکستان کے کسی بھی حصے میں بستے ہوں تاہم یہ ہم سب کی ذمہ داری ہے کہ کراچی کے مسائل کے حل کے لیے ایک ساتھ بیٹھیں اور اس شہر کی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے منصوبہ بندی کریں۔ ہمیں صدق دل کے ساتھ مسائل کو حل کرنا چاہیے تبھی ہم مل کر آگے بڑھیں گے اور شہر ‘صوبے اور ملک کی ترقی میں اپنا کردار ادا کرنے کے قابل ہوںگے۔ اس موقع پر تحصیل ایبٹ آباد کونسل کے ناظم محمد اسحاق نے کہا کہ کراچی پاکستان کا سب سے بڑا شہر ہے اور ہم یہاں کی بلدیہ کا دورہ اس لیے کررہے ہیں کہ بلدیاتی معاملات کے حوالے سے کچھ سیکھ سکیں اور یہاں سے حاصل ہونے والے تجربات ایبٹ آباد میں آزمائیں۔ انہوں نے کہا کہ ایبٹ آباد تحصیل کونسل کو ہر قسم کے مالی اور انتظامی اختیارات حاصل ہیں یہاں تک کہ ٹریفک کنٹرول کا نظام تک ہمارے پاس ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہاں آنے کے بعد ہمیں بلدیہ عظمیٰ کراچی کو درپیش مسائل سے آگاہی ملی ہمارے لیے یہ امر باعث تشویش ہے کہ پاکستان کے معاشی حب کوجو پورے ملک کی معیشت کو چلاتا ہے اس بری طرح نظر انداز کیا جا رہا ہے اور ہم امید کرتے ہیں کہ اختیارات اور وسائل کے حصول کے لیے کراچی کی منتخب بلدیاتی قیادت کے مطالبات پر زرور غور ہوگا اور کراچی کے شہریوں کو بہتر بلدیاتی سہولیات میسر آئیں گی۔ انہوں نے اس موقع پر ڈپٹی میئر کراچی کو دعوت دی کہ وہ سٹی کونسل کے ارکان کے ہمراہ ایبٹ آباد کے دورے پر تشریف لائیں ۔ انہوں نے کہا کہ کراچی ہمارا شہر ہے اور ہمیں دل و جان سے عزیز ہے اور یہاں آکر ہمیں ایسا محسوس ہورہا ہے کہ جیسے ہم اپنے ہی شہر میں موجود ہیں۔آخر میں سٹی کونسل میں پارلیمانی لیڈر اسلم شاہ آفریدی نے ایبٹ آباد کونسل کے ناظم اور دیگر ارکان کی بلدیہ عظمیٰ کراچی کے مرکزی دفتر آمد پر اُن کا شکریہ ادا کیا اور اس اُمید کا اظہار کیا کہ مستقبل میں بھی کراچی اور ایبٹ آباد کے بلدیاتی نمائندوں کے درمیان رابطے جاری رہیں گے اور ہم ایک دوسرے کے تجربات سے سیکھ کر اپنے اپنے شہروں کی زیادہ بہتر خدمت کر سکیں گے۔  
     
     
 
News Photo Gallery
 
 
 
 
 
 
 

 
     
     

 

 

 

 

 
 
     
 

Copyright © 2011-2012 Karachi Metropolitan Corporation. All rights reserved.
The KMC will not be responsible for the content of external internet sites. / Login  / Webmail  / Webmail 2  / 1339 Executive Dashboard