Home  
    Mayor  
    Deputy Mayor  
    Metropolitan Commissioner  
    Departments  
    KMC Directory  
    Photo Gallery  
    Video Gallery  
       
 
 
       
    Tender Information  
    KMC Function  
    Tenders  
    Grand Auctions  
    Section 144 CR.P.C  
    Notifications  
    KMC Resolution  
       
 
 
       
    Public Notice  
    Information  
    National Holidays  
    Prayer Timings  
    Archive  
       


 
 
 
 
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ کراچی کا 90فیصد سیوریج اور 70 فیصد کچرا برساتی نالوں میں ڈالا جاتاہے ، مون سون کی بارشوں میں نالوں کو صاف کرنا پڑرہا ہے-  
     
  13-Jul-2017  
     
   
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ کراچی کا 90فیصد سیوریج اور 70 فیصد کچرا برساتی نالوں میں ڈالا جاتاہے ، مون سون کی بارشوں میں نالوں کو صاف کرنا پڑرہا ہے،بلدیہ ٹاؤن میں تین مہینے میں صرف ایک گھنٹے پانی آتا ہے، یہاں کے لوگ حکومت سندھ کو بددعائیں دے رہے ہیں، واٹر بورڈ اپنی ذمہ داری نہیں نبھا رہا ہے، وزیراعلیٰ سندھ سے درخواست کرتا ہوں پانی کا مسئلہ حل کریں، سالڈ ویسٹ مینجمنٹ کام کرے ،ضلع غربی مسائل کی آماجگاہ بن چکا ہے، کراچی کاساحل تباہی کے دہانے پر ہے،ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کی صبح بلدیہ ٹائون نمبر 3 ، رشید آباد ، جونا گڑھ محلہ، نیازی محلہ، میر عام روڈ اور دیگر علاقوںکے دورے میں میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا، اس موقع پر سابق ٹائون ناظم اظہار احمد خان، سینئر ڈائریکٹر میونسپل سروسز مسعود عالم، یوسی کونسلر زاہد بشیر اور دیگر افسران بھی موجود تھے۔ قبل ازیں میئر کراچی نے بلدیہ ٹائون پہنچنے کے بعد مختلف علاقوں کا دورہ کیا اور صحت و صفائی کی صورتحال کا جائزہ لیا، اس موقع پر علاقہ مکین بھی بڑی تعداد میں موجود تھے جنہوں نے علاقے میں پانی کی عدم فراہمی، جا بجا کچرے کے ڈھیراور نالوں کی صفائی نہ ہونے کے باعث علاقے میں پھیلی ہوئی بدبو کی شکایت کی جس پر میئر کراچی نے کہا کہ بلدیہ ٹائون کا بڑا مسئلہ پانی ہے ، یہاں تین مہینے بعد پانی آتاہے ،واٹر بورڈ اپنی ذمہ داری نہیں نبھا رہا ،واٹر بورڈ سندھ حکومت کے زیر انتظام ہے، وزیر اعلیٰ سندھ سے درخواست کرتا ہوں کہ یہاں کے لوگ مشکلات کا شکار ہیں اور وہ خود یہاں کا دورہ کرکے صورتحال دیکھیں اور یہاں تعینات واٹر بورڈ کے افسران کو ہٹائیں یا اپنے لوگوں سے کہیں کہ وہ بلدیہ ٹائون کا دورہ کریں ، انہوں نے علاقہ مکینوں کو نالوں کی صفائی جلد کرانے کی یقین دہانی کراتے ہوئے محکمہ میونسپل سروسز کے سربراہ کو ہدایت کی کہ نالوں کی صفائی کا کام تیز کیا جائے اور برساتی پانی کی نکاسی کا بھرپور انتظام ہونا چاہئے، بارشوں کے دوران نکاسی آب پر مامور عملہ مستعد رکھا جائے اس معاملے میں کسی بھی کوتاہی یا غفلت برادشت نہیں کی جائے گی، میئر کراچی نے کہا کہ جتنی چاہے رقم ریلیز کردی جائے جب تک نالوں کی صفائی کا باقاعدہ میکنیزم نہیں اپنایا جائے گا صورتحال جوں کی توں رہے گی، میں جب جیل میں تھا تو نالوں کی صفائی کے نام پر 43 کروڑ روپے ریلیز کئے گئے تھے اس وقت حکومت سندھ کے ہی لگائے گئے ایڈمنسٹریٹرز کام کررہے تھے، انہوں نے کہا کہ کراچی کا 90 فیصد سیوریج برساتی نالوں میں ڈالے جانے کا ذمہ دار واٹر بورڈ ہے لہٰذا اس ادارے کو اپنی ذمہ داری محسوس کرنی ہوگی جبکہ سندھ سالڈ ویسٹ مینجمنٹ بورڈ کو بھی اس بات کو یقینی بنانا ہوگا کہ کچرا نالوں میں نہ پھینکا جائے بلکہ لینڈ فل سائٹ تک پہنچایا جائے ، انہوں نے کہا کہ کراچی کو بے تحاشہ مسائل کا سامنا ہے اور جب تک تمام ادارے اپنی ذمہ داری سمجھتے ہوئے اپنے فرائض ایمانداری سے انجام نہیں دیں گے صورتحال تبدیل نہیں ہوگی ، تمام تر مسائل اور ناکافی وسائل کے باوجود ہم شہر کے مختلف حصوں میں لوگوں کو درپیش مسائل حل کرنے کی بھرپور کوشش کر رہے ہیں اور امید ہے کہ ان کوششوں کے مثبت نتائج سامنے آئیں گے ۔  
     
     
 
News Photo Gallery
 
 
 
 
 
 
 

 
     
     

 

 

 

 

 
 
     
 

Copyright © 2011-2012 Karachi Metropolitan Corporation. All rights reserved.
The KMC will not be responsible for the content of external internet sites. / Login  / Webmail  / Webmail 2  / 1339 Executive Dashboard