Home  
    Mayor  
    Deputy Mayor  
    Metropolitan Commissioner  
    Departments  
    KMC Directory  
    Photo Gallery  
    Video Gallery  
       
 
 
       
    Tender Information  
    KMC Function  
    Tenders  
    Grand Auctions  
    Section 144 CR.P.C  
    Notifications  
    KMC Resolution  
       
 
 
       
    Public Notice  
    Information  
    National Holidays  
    Prayer Timings  
    Archive  
       


 
 
 
 
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے کراچی کی مختلف یونین کونسلوں سے حاصل کئے گئے پانی کے نمونے انسانی استعمال کے لئے غیر موزوں ثابت ہونے پر گہری تشویش ظاہر کی-  
     
  07-Aug-2017  
     
   
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے کراچی کی مختلف یونین کونسلوں سے حاصل کئے گئے پانی کے نمونے انسانی استعمال کے لئے غیر موزوں ثابت ہونے پر گہری تشویش ظاہر کرتے ہوئے ادارہ فراہمی و نکاسی آب سے کہا ہے کہ شہریوں کو پانی کی فراہمی کا نظام بہتر بنانے کے لئے فوری اقدامات کئے جائیں تاکہ غیر صحت بخش پانی کے استعمال سے شہریوں کی صحت اور جان کو لاحق خطرات دور کئے جاسکیں، انہوں نے یہ بات کے ایم سی فوڈ لیبارٹری کی واٹر ٹیسٹنگ رپورٹ آنے کے بعد کہی جس کے مطابق کراچی کی 24 مختلف یونین کونسلوں سے حاصل کئے گئے پینے کے پانی کے 204 نمونوں میں سے 202 نمونے انسانی استعمال کے لئے غیرموزوں پائے گئے،ان نمونوں کا تجزیہ کے ایم سی فوڈ لیبارٹری میں اسٹینڈرڈ ٹیسٹنگ کے طریقے سے کیاگیا، تفصیلات کے مطابق بلدیہ عظمیٰ کراچی کی کونسل کے گزشتہ اجلاس میں شہر کے مختلف علاقوں میں آلودہ اور غیرصحت مند پانی کی فراہمی کے حوالے سے پیش کی گئی قرارداد منظور ہونے کے بعد میئر کراچی وسیم اختر نے ہدایت کی تھی کہ فوری طور پر کراچی کے مختلف علاقوں سے وہاں فراہم کئے جانے والے پانی کے نمونے حاصل کئے جائیں اور ان کا طبی اور سائنسی بنیاد پر تجزیہ کیا جائے لہٰذا محکمہ فوڈ اینڈ کوالٹی کنٹرول کے سینئر ڈائریکٹر اصغر عباس شیخ نے میئر کراچی کو جمع کئے گئے پانی کے نمونوں اور ان کے ٹیسٹ کی رپورٹ پیش کی اس موقع پر سینئر ڈائریکٹر ایچ آر ایم جمیل فاروقی بھی موجود تھے۔ رپورٹ کے مطابق بلدیہ عظمیٰ کراچی کے محکمہ فوڈ اینڈ کوالٹی کنٹرول نے پاکستان پیو رفوڈز آرڈیننس 1960ء کے تحت شہر کے مختلف علاقوں میں فراہم کئے جانے والے پانی کے نمونے حاصل کئے اور ان کا تجزیہ فوڈ لیبارٹری میں کیا جس پر 24 مختلف یونین کونسلوں سے لئے جانے والے 204 نمونوں میں سے 202 نمونے انسانی استعمال کے لئے غیرموزوں پائے گئے جبکہ کلورین کی موجودگی جانچ کے دوران 85 پانی کے نمونوں میں سے صرف دو نمونوں میں کلورین شامل تھی جبکہ 83 نمونے کلورین کے بغیر پائے گئے اسی طرح 119 نمونوں کا بیکٹیریاٹیسٹ کیا گیا اور تمام ہی نمونوں میں ای کولی ٹائپ بیکٹیریا پائے جانے کا انکشاف ہوا جو انسانی صحت کے لئے نقصان دہ ہے اور اس کی وجہ سے ڈائیریا ، ٹائیفائیڈ ، ہیپاٹائٹس جیسے مہلک مرض شہریوں میں پھیلنے کا خطرہ ہے، لیبارٹری ٹیسٹ کے لئے پانی کے نمونے جن علاقوں سے حاصل کئے گئے ان میں سخی حسن نارتھ ناظم آباد ،سیکٹر 11-J ، 11-E ، A ، 5A2 ، گودھراکالونی نارتھ کراچی، عامل کالونی جمشید روڈ، عالمگیر مسجد بہادرآباد، بلاک20 فیڈرل بی ایریا، بلاک8 ایف بی ایریا، لیاری کلاکوٹ کی مختلف یوسیز، مدینہ کالونی بلدیہ ٹائون، بلاک B گلشن غازی، اخترکالونی، محمود آباد ، منظور کالونی، اعظم بستی، عزیز آباد، اورنگی ٹائون، گلشن اقبال، میٹروول، عثمان آباد ،کورنگی اور دیگر علاقے شامل تھے۔  
     
     
   
     
     

 

 

 

 

 
 
     
 

Copyright © 2011-2012 Karachi Metropolitan Corporation. All rights reserved.
The KMC will not be responsible for the content of external internet sites. / Login  / Webmail  / Webmail 2  / 1339 Executive Dashboard