Home  
    Mayor  
    Deputy Mayor  
    Metropolitan Commissioner  
    Departments  
    KMC Directory  
    Photo Gallery  
    Video Gallery  
       
 
 
       
    Tender Information  
    KMC Function  
    Tenders  
    Grand Auctions  
    Section 144 CR.P.C  
    Notifications  
    KMC Resolution  
       
 
 
       
    Public Notice  
    Information  
    National Holidays  
    Prayer Timings  
    Archive  
       


 
 
 
 
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ عباسی شہید اسپتال میں چلڈرن ایمرجنسی بلاک کے قیام سے کراچی کے شہریوں کو بے انتہا ریلیف ملے گا-  
     
  30-Jun-2018  
     
   
     
  میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ کے ایم سی کے اسپتالوں کو بہتر کرنے کیلئے مخیر حضرات سامنے آئیں، کراچی نے ان کو بہت کچھ دیا ہے اب وہ کراچی کا قرض ادا کریں، عباسی شہید اسپتال میں چلڈرن ایمرجنسی بلاک کے قیام سے کراچی کے شہریوں کو بے انتہا ریلیف ملے گا، آج سے پہلے یہ کوئی سوچ بھی نہیں سکتا تھا کہ عباسی شہید اسپتال میں جدید ترین سہولتوں سے آراستہ بچو ںکے لئے چلڈرن ایمرجنسی دستیاب ہوگی، کے ایم سی کے اسپتالوں میں صفائی سے علاج تک تمام میڈیکل سپرنٹنڈنٹس توجہ دیںشہریوں کو عبادت سمجھ کر علاج معالجہ کی بہتر سہولتیں مہیاکریں، یہ بات انہوں نے چلڈرن ایمرجنسی کے افتتاح کے موقع پر منعقدہ تقریب سے مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے کہی، میٹروپولیٹن کمشنر ڈاکٹر سید سیف الرحمن، چائلڈ لائف فائونڈیشن کے سی ای او ڈاکٹر احسن ربانی، ضلع وسطی کے چیئرمین ریحان ہاشمی، وائس چیئرمین سید شاکر علی، میڈیکل کمیٹی کے چیئرپرسن ناہید فاطمہ، سینئر ڈائریکٹر میڈیکل سروسز ڈاکٹر بیربل، میڈیکل سپرنٹنڈنٹ عباسی شہید اسپتال ڈاکٹر ندیم راجپوت، بچوں کے شعبے کے سربراہ ڈاکٹر پروفیسر سلطان مصطفی ،دیگر افسران اور بڑی تعداد میں شعبہ طب کے وابستہ پروفیسر، ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل اسٹاف بھی موجود تھا، قبل ازیں میئر کراچی وسیم اختر نے تختی کی نقاب کشائی کرکے چلڈرن ایمرجنسی بلاک کا باقاعدہ افتتاح کیا ، اس موقع پر انہو ںنے چلڈرن ایمرجنسی کا تفصیلی دورہ کیا اور احاطے میں پودا بھی لگایا، میئر کراچی وسیم اختر نے کہا کہ 11 ستمبر 2017ء کو چلڈرن ایمرجنسی سے متعلق MoU سائن کیا گیا تھا اور 9 ماہ کی قلیل مدت میں اسے مکمل کرکے آج سے بچوں کا علاج شروع کیا جارہا ہے، کسی بھی بات کا فیصلہ کرنے کے بعد مشکلات ضرور آتی ہیں لیکن ہمت ، جذبے اور لگن کے ساتھ اگر کام کیا جائے تو ہر مشکل پر قابو پایا جاسکتا ہے، میرے پاس اچھی ٹیم موجود ہے اچھے ڈاکٹرز ہیں ہم کراچی کے شہریوں کو بہترین خدمات فراہم کریں گے، انہو ںنے کہا کہ تنخواہوں کی ادائیگی سمیت کچھ مسائل ضرور ہیں لیکن ان پر ہم جلد قابو پا لیں گے، انہوں نے کہا کہ میری پہلی ترجیح تنخواہوں کی ادائیگی ہے اس کے بعد کراچی کے انفراسٹرکچر پر توجہ دے رہا ہوں، میئر کراچی نے کہا کراچی میں پینے کے صاف پانی کا سسٹم تباہ ہوچکا ہے سڑکیں ٹھیک نہیں ہیں، سیوریج کا نظام درہم برہم ہے، اسپتالوں میں ادویات نہیں ہیں لیکن یہ سب ٹھیک کریں گے مخیر حضرات میرا ساتھ دیں میں بلدیہ کے تمام اسپتال انہیں دینے کیلئے تیار ہوں انہوں نے کہا کہ عباسی شہید اسپتال کو کراچی کا بہترین اسپتال بنائیں گے یہ عوام کا حق ہے، انہوں نے کہا کہ کراچی میں آپریشن بہت ہوچکا، امن آچکا ہے اب کراچی کی ترقی کے لئے آپریشن کیا جانا چاہئے نوجوانوں کو روزگار کی فراہمی ضروری ہے، کراچی میں انڈسٹری نہیں لگے گی تو ایک بار پھر امن قائم کرنے کی محنت ضائع ہوجائے گی، نوجوانوں کو روزگار نہیں ملا تو وہ ایک بار پھر دہشت گردی کا حصہ بن جائیں گے، ہم نے اپنی غلطیوں سے سبق سیکھا ہے اسے دہرانا نہیں چاہتے اور کراچی کو بہتر سے بہتر دیکھنا چاہتے ہیں، کراچی کے ٹیکس کا پیسہ اب کراچی پر خرچ ہونا چاہئے، میئر کراچی نے کہا کہ چلڈرن ایمرجنسی میں 500 بچوں کا روزانہ علاج کرنے کی گنجائش موجود ہے اور یہ نہ صرف کراچی بلکہ اندرون سندھ کے شہروں اور بلوچستان کے مختلف علاقوں کے بچوں کو بھی سہولیات مہیا کرے گا، چائلڈ لائف فائونڈیشن کے سی ای او ڈاکٹر احسن ربانی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کراچی میں علاج کی مناسب سہولتیں نہ ہونے کی وجہ سے روزانہ 100 بچے انتقال کر جاتے ہیں جبکہ پاکستان میں یہ تعداد 1000 کے قریب ہے، یہ بچے ہمارے معاشرے کی بے حسی کی وجہ سے مر جاتے ہیں، ہر بیماری کا علاج موجود ہے لیکن طبی سہولتیں نہ ہونے کے باعث یہ بچے زندہ نہیں رہ پاتے، نمونیا کا علاج موجود ہے لیکن غریب ماں باپ علاج نہیں کر وا پاتے، سرکاری اسپتالوں کو بہتر کرنے کی ضرورت ہے کیونکہ ان میں غریب ماں باپ ہی اپنے بچوں کو علاج کے لئے لے کر آتے ہیں، انہوں نے کہا کہ چائلڈ لائف فائونڈیشن اب تک 20 لاکھ بچوں کو علاج کی سہولتیں فراہم کر چکی ہے، عباسی شہید اسپتال میں بچوں کی ایمرجنسی جدید مکمل آٹو میٹک کارڈئیک مانیٹر ز، ڈیفیبر یلیٹیٹرز، فوٹو تھراپی یونٹس سے لیس ہے یہ ایمرجنسی 50 بستروں پر مشتمل ہے یہاں پر معیاری علاج اور ادویات مفت فراہم کی جائیں گی، اس شعبہ حادثات میں تعینات بچوں کے ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل اسٹاف تعلیم یافتہ، تربیت یافتہ اور ایمرجنسی کیئر میں ماہر ہیں، مستند عملے کے ساتھ اچھی ایمرجنسی کیئر بہت کم دور اور مہنگی ہونے کی وجہ سے اس خلاء کر پُر کرنے کے لئے عباسی شہید اسپتال میں بچوں کی ایمرجنسی کا شعبہ قائم کیا گیا ہے، عباسی شہید اسپتال میں شعبہ حادثات کا قیام ایک بڑی کامیابی ہے جس کا اولین مقصد مریضوں کو معیاری طبی امداد تک آسان رسائی مہیا کرنا ہے۔ تقریب سے ریحان ہاشمی، ڈاکٹر ندیم راجپوت اور دیگر مقررین نے بھی خطاب کیا۔  
     
     
   
     
     

 

 

 

 

 
 
     
 

Copyright © 2011-2012 Karachi Metropolitan Corporation. All rights reserved.
The KMC will not be responsible for the content of external internet sites. / Login  / Webmail  / Webmail 2  / 1339 Executive Dashboard