Home  
    Mayor  
    Deputy Mayor  
    Metropolitan Commissioner  
    Departments  
    KMC Directory  
    Photo Gallery  
    Video Gallery  
       
 
 
       
    Tender Information  
    KMC Function  
    Tenders  
    Grand Auctions  
    Section 144 CR.P.C  
    Notifications  
    KMC Resolution  
       
 
 
       
    Public Notice  
    Information  
    National Holidays  
    Prayer Timings  
    Archive  
       


 
 
 
 
     
  بلدیہ عظمیٰ کراچی کے آئی اسپنسر اسپتال میں 12 سال بعد قرنیہ کی پیوند کاری دوبارہ شروع ہو رہی ہے جس پر کام شروع کردیا گیا ہے-  
     
  19-Dec-2018  
     
   
     
  بلدیہ عظمیٰ کراچی کے آئی اسپنسر اسپتال میں 12 سال بعد قرنیہ کی پیوند کاری دوبارہ شروع ہو رہی ہے جس پر کام شروع کردیا گیا ہے ایک ہفتہ کے اندر اندر اسپتال میں قرنیہ پیوند کاری کے لئے شعبہ کا افتتاح کیا جائے گا، ان خیالات کا اظہار میئر کراچی وسیم اختر نے اپنے دفتر میں لائنز کلب انٹرنیشنل کے تین رکنی وفد سے بات چیت کرتے ہوئے کیا جس نے کونسل چیئرپرسن عبدالکریم کی قیادت میں میئر کراچی سے ان کے دفتر میں ملاقات کی، اس موقع پر لائنز کلب کے ارشد السلام ، عبدالرحمن الانہ، بلدیہ عظمیٰ کراچی کی کمیٹیوں کی چیئرپرسن ناہید فاطمہ، صبحین غوری، چیئرمین سعاد بن جعفر، قیصر امتیاز اور سینئر ڈائریکٹر میڈیکل سروسز ڈاکٹر بیربل بھی موجود تھے، وفد نے بتایا کہ لائنز کلب کے وفد نے بتایا کہ کلب سری لنکا سے قرنیہ منگواتا ہے جس پر ساڑھے تین سو ڈالر کے اخراجات آتے ہیں تاہم پیوند کاری پر 70 ہزار روپے کے اخراجات ہیں ، ماضی میں آئی اسپنسر اسپتال میں قرنیہ کی پیوند کاری کا بڑا مرکز تھا اور اس اسپتال میں 73 ہزار سے زائد آنکھوں سے محروم مریضوں کو قرنیہ کی پیوند کاری کے ذریعے روشنی بحال کی گئی ، بلدیہ عظمیٰ کراچی آئی اسپنسراسپتال میں دوبارہ سہولت مہیا کرے تو سری لنکا سے قرنیہ لائنز کلب فراہم کرے گا، میئر کراچی وسیم اختر نے اس پر افسوس کا اظہار کیا کہ شہریوں کو فراہم کی جانے والی اہم ترین سہولت بند ہوگئی، انہوں نے ایم ایس اور ڈائریکٹر میڈیکل سروسز کو ہدایت کی کہ اس پر فوری کام شروع کیا جائے اور اسپتال میں قرنیہ کے شعبے کو فوری بحال کیا جائے، میئر کراچی نے شہریوں سے اپیل کی کہ وہ بھی بعدازمرگ قرنیہ عطیہ کرنے کی وصیت کریں، سری لنکا سے قرنیہ ملنا نیک شگون ہے مگر ہمیں سماجی مسائل کو خود حل کرنا چاہئ، یہ ایک بڑا سماجی مسئلہ ہے، آنکھوں کی روشناہی سے محروم کسی فرد کی روشناہی بحال ہوجائے تو اس کی خوشی کا اندازہ لگانا مشکل ہے، انہوں نے کہا کہ آئی اسپنسر اسپتال میں اس شعبہ کو فوری بحال کیا جائے اور ایسے انتظامات کئے جائیں کہ یہ شعبہ دوبارہ بند نہ ہو، میئر کراچی نے کہا کہ نوجوان کا بچہ جو بینائی سے محروم ہو اس کے لئے تو یہ بہت ضروری ہے کیونکہ اس کی زندگی ابھی باقی ہوتی ہے، ایسا طریقہ کار طے کیا جائے کہ سب سے کم عمر نابینا فرد کو پہلے قرنیہ کی پیوند کاری ہو، بلدیہ عظمیٰ کراچی محدود وسائل میں ہر ممکن تعاون اور وسائل مہیا کرے گی، واضح رہے کہ آئی اسپنسر اسپتال ماضی میں ایشیا کے نامور اسپتالوں میں شامل تھا اس خطے میں پہلا اسپتال تھا جہاں ایران، افغانستان اور ملک بھر سے مریض قرنیہ کی پیوندکاری اور دیگر علاج کے لئے اس اسپتال میں آتے تھے تاہم 12 سال قبل اسپتال میں قرنیہ کی پیوندکاری کا سلسلہ بند ہوگیا تھا اب میئر کراچی وسیم اختر کی ہدایت اور کوششوں سے اس شعبے کو بحال کیا جا رہاہے جہاں پہلے مرحلے میں ہر ماہ 4 مریضوں کو قرنیہ کی پیوندکاری کی جائے گی، بعدازیں اس میں اضافہ کیا جائے گااس حوالے سے لائنز کلب انٹرنیشنل کے ساتھ بلدیہ عظمیٰ کراچی کا معاہدہ کیا جائے گا جو وہ سری لنکا سے قرنیہ لانے کی ذمہ داری انجام دیں گے اور بلااخراجات بلدیہ عظمیٰ کراچی کے آئی اسپنسراسپتال کو فراہم کریں گے۔  
     
     
   
     
     

 

 

 

 

 
 
     
 

Copyright © 2011-2012 Karachi Metropolitan Corporation. All rights reserved.
The KMC will not be responsible for the content of external internet sites. / Login  / Webmail  / Webmail 2  / 1339 Executive Dashboard